153,737 views 1,471 on YTPak
903 35

Published on 18 Aug 2011 | over 5 years ago

A Heart Touching Ghazal Written By SHABBIR HUSSAIN SHERY & Recited By Rj Zia Anjum - ضیاء انجم
www.Facebook.com/Xia.Anjum

Listen Or Download In Audio :-
www.4shared.com/audio/yuZR3M4I/Raah-e-Wafa_Ki_Saleeb.html
-----------------------------------------------------

Yun Rah-E-Wafa Ki Saleeb Per Do Qadam Uthane Ka Shukria
Bara Pur-Khatar Tha Yeh Rasta Tere Lout Jane Ka Shukria

Jo Udas Hain Tere Hijr Ma, Jinhe Bojh Lagti Hai Zindagii
Unhe Dekh Kr Sar-E-Bazm Yun Tera Moo Chupaney Ka Shukria

Teri Yaad Kis Kis Bhais Ma Mere Shair-O-Naghma Ma Dhal Gae
Yeh Kamal Hai Teri Yad Ka Mujhe Yad Aane Ka Shukria

Mujhey iLm Hai Nahi Mit Saki Thi Jo Guftago Ki Woh Tishnagi
Mila Deed Se Bhe Sakoon Mujhe, Sar-e-Baam Aney Ka Shukriya

Hai Zamane Bhar Ka Asool Jo Woh Asool Tum Ne Nibha Dia
Yahi Rasm Tehri Hai Moutabar, Mje Bhol Jane Ka Shukria

Mujhey Khasta Haal Sa Dekh Kr Tere Hont Phol Se Khil Uthey
Mujhey Gham Nahi Mujhe Dekh Kr, Tere Muskuraney Ka Shukriya

--------

یوں راہِ وفا کی صلیب پر دو قدم اُٹھانے کا شُکریہ
بڑا پُر خطر تھا یہ راستہ ، تیرے لوٹ جانے کا شُکریہ

جو اُداس ہیں تیرے ھِجر میں ، جنھیں بوجھ لگتی ہیے زندگی
اُنہیں دیکھ کر سرِ بزم یوں ، تیرا منہ چُھپانے کا شُکریہ

تیری یاد کِس کِس بھیس میں میرے شعر و نغمہ میں ڈھل گئی
یہ کمال ہے تیری یاد کا ، مُجھے یاد آنے کا شُکریہ

مُجھے عِلم ہے نہیں مِٹ سَکی تھی جو گُفتگو کی وہ تشنگی
مِلا دِید سے بھی سَکوں مُجھے ، سرِ بام آنے کا شُکریہ

ہے زمانے بھر کا اصول جو ، وہ اصول تُم نے نبھا دیا
یہ رسم ٹھہرے گی معتبر ، مجھے بھول جانے کا شُکریہ

مُجھے خستہ حال سا دیکھ کر تیرے ہونٹ پھول سے کِھل اُٹھے
مجھے غم نہیں ، مجھے دیکھ کر تیرے مُسکرانے کا شُکریہ

شبیر حُسین شَیری

Loading related videos...