164,199 views 353 on YTPak
253 10

Published on 11 Dec 2008 | over 8 years ago

Click on this link to watch original video by PTV
www.youtube.com/watch

Poet: Dr. Muhammad Iqbal
Book: Baang e Dara
Singer: Ibrar ul Haq
Album: Apna Muqam paida kar
Kabhi aye haqeeqat e muntazir nazar aa libas e mijaz me
ke hazar sijday taRap rahay hain meri jabeen e niyaz me


کبھی اے حقیقت منتظر نظر آ لباس مجاز میں
کہ ہزاروں سجدے تڑپ رہے ہیں‌میری جبین نیاز میں

طرب آشنائے خروش ہو، تو نوا ہے محرم گوش ہو
وہ سرور کیا کہ چھپا ہوا ہو سکوت پردہ ساز میں

تو بچا بچا کہ نہ رکھ سے، ترا آئنہ ہے وہ آئنہ
کہ شکستہ ہو تو عزیز تر ہے نگاہ آئنہ ساز میں


نہ کہیں جہاں میں اماں ملی، جو اماں ملی تو کہاں ملی
مرے جرم خانہ خراب کو ترے عفو بندہ نواز میں

نہ وہ عشق میں رہیں گرمیاں، نہ وہ حسن میں رہیں شوخیاں
نہ وہ غزنوی میں تڑپ رہی، نہ وہ خم ہے زلف ایاز میں
----------------------
Roman Script
Kabhi Aye Haqeeqat-e-muntazar, Nazar Aa Libaas-e-majaaz Mein
Ke Hazaaron Sajade Tadap Rahe Hain Meri Jabeen-e-niyaaz Mein

Na Bacha-bacha Ke Tu Rakh Ise, Tera Aaeena Hai Vo Aaena
Ke Shikasta Ho To Azeeztar Hai Nigaah-e-aaiinaasaaz Mein

Na Vo Ishq Mein Raheen Garmiyaan, Na Vo Husn Mein Raheen Shokiyaan
Na Vo Gazanavi Mein Tadap Rahi Na Vo Kham Hai Zulf-e-aayaaz Mein

Main Jo Sar-ba-sajada Huaa Kabhi, To Zameen Se Aane Lagi Sada
Tera Dil To Hai Sanam Aashanaa, Tujhe Kya Milega Namaaz Mein

Loading related videos...