11,438 views 145 on YTPak
87 5

Published on 29 Jan 2016 | 10 months ago

حکیم محمد طارق محمود چغتائی مجذوبی دامت برکاتہم کا درس28جنوری 2016 عبقری درس
بنیادی طورپہ بعض اوقات اپنی زندگی کے صبح وشام اوراپنی زندگی کے بیت سال جب میں اس پرنظردوڑاتا ہوں تومیں محسوس کرتاہوں کہ ہم قیدی کی زندگی گزاررہے ہیں۔ مسلمان قیدی ہے اورغیرمسلم آزاد ہے۔ لبرٹی کے معنی کیاہیں۔ مسلمان قیدی ہیں اورجومسلمان نہیں ہیں وہ آزاد ہیں حلال اس کے لیے نہیں حرام اس کیلئے نہیں، یہ اُڑنے والا پرندہ یہ دودھ دینے والے ہیں یہ بیٹھنے والے ہیں ، یہ حرام ہیں یاحلال ہیں ، یہ جائز ہیں یاناجائز ہیں ۔ کہامومن اس دنیامیں ایسے ہیں جیسے پنجرے میں پرندہ ، میں بعض اوقات زندگی کو سوچتاہوں اجلا لباس ہے مومن جس پرایک چھینٹا بھی نظرآتا ہے ۔ صاف شفاف کاٹن کالباس پہنا ایک چھوٹا سا چھینٹا بھی محسوس ہوتاہے۔ یہ لگاہوا نشان لگا ہوا ہے۔ میرے پاس سفیدرومال ہے اس پرچھوٹا ساچھینٹا ۔ اورجس کے کپڑے بالکل سیاہ ہو اس پرچھینٹاتو کیابڑے بڑے داغ بھی نظرنہیں آئیں گے۔ میں جسے اکثرکہاکرتاہوں ورکشاپی لباس، گریس موبائل، گاڑیوں کے نیچے چلے جاتے ہیں ، لباس بھی ایساہوتا ہے کہ آنے والے ہرداغ کو جذب کرتا جاتا ہے۔ مومن اجلا لباس ہے ایمان کی وجہ سے کلمے کی وجہ سے اللہ کی ذات سے تعلق کی وجہ سے اورمدینے ﷺ کے امتی ہونے کی نسبت کی وجہ سے ۔ زندگی ہے ، بے بسی ، کیوں یااللہ میں بے بس ہوں توبے بس نہیں۔ ہماری زندگی آزاد زندگی نہیں ہے۔ عنقریب آزاد زندگی کے دروازے کھلنے والے ہیں اورپھرجوآزاد ہیں وہ غلام ہوں گے ۔ ان کی پھرمزے نہیں ہوں گے آج ہماری مرضی نہیں ان کی مرضی ہے۔ کل کو ہماری مرضی ہو گئی ان کی مرضی نہیں ہو گی۔ مومن کی زندگی آزاد زندگی نہیں ہے اورمومن بنیادی طورپر بنیادپرست ہے اورجومیرے مدینے ﷺ نے لکریں دی ہیں ہم ان لکیروں کے فقیرہیں ہم بنیاد پرست ہیں۔ اورہماری بنیادوں میں قرآن وحدیث ہے اورہماری بنیادوں میں صحابہ کی زندگی ہے اہل بیت کی زندگی کانمونہ ہے اورہماری بنیادوں میں کربلا کے خون کاپیغام اورفلسفہ ہے۔

Loading related videos...